Dialogue – 67 ( ترتیب )

“حالات بہت خراب ہیں۔  کیا  کِیا   جائے؟”

“توبہ  اور  صدقہ۔۔۔”

“توبہ تو  بہت کی۔  صدقہ بھی۔۔     پر  معاملات  ویسے ہی ہیں۔”

“آپ تو   ڈاکٹر  ہیں۔   جب ہلکی  دوا  اثر نہ کرے،   تو  کیا کرتے ہیں؟۔۔۔۔۔”

“ڈوز بڑھاتے ہیں۔۔”

“پھر بھی افاقہ نہ ہو تو۔۔۔؟”

” مزید ٹسٹ کرتے ہیں۔۔ بیماری کو نئے زاویوں سے دیکھتے ہیں۔۔”

“پھر تو آپ سمجھ ہی گئے ہوں گے،  کہ کیا کرنا ہے۔۔۔اور کِس ترتیب میں۔۔۔۔۔   😊  “

Advertisements

5 thoughts on “Dialogue – 67 ( ترتیب )

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s