میں باغی نہیں ہوں

ایک دن مرحوم آخوند کاشی صاحب وضو کر رہے تھے، کہ ایک شخص بہت جلدی میں آیا، تیزی سے وضو کیا اور نماز شروع کردی..
آخوند صاحب بہت وقت سے تمام آداب اور دعاؤں کے ساتھ وضو کرتے تھے.. قبل اس کے کہ آخوند صاحب وضو ختم کرتے وہ شخص نماز ظہر بھی پڑھ چکا تھا..!!
آخوند صاحب اور اس شخص کا سامنا ھوا، تو آخوند صاحب نے سے پوچھا! کیا کر رہے تھے..!
اس شخص نے کہا! کچھ نہیں..!
آخوند صاحب! تم کچھ بھی نہیں کر رہے تھے..!!
شخص! نہیں کچھ بھی نہیں..!! (وہ جانتا تھا کہ اگر کہا کہ نماز پڑھ رہا تھا تو مشکل میں پڑ جاؤں گا)
آخوند صاحب! کیا تم نماز نہیں پڑھ رہے تھے..!!
شخص! نہیں..!
آخوند صاحب! میں نے خود دیکھا کہ تم نماز پڑھ رہے تھے..!!
شخص! آقا آپ نے غلط دیکھا ہے..!!
آخوند صاحب! پھر تم کیا کر رہے تھے..!!
اس شخص نے کہا!
“بس! آیا ہوں کہ خدا سے کہوں “میں باغی نہیں ہوں!”

بہت عرصے تک جب آخوند سے ان کے احوال کے بارے میں سوال کیا جاتا تو وہ اپنی ایک خاص حالت میں کہتے… “میں باغی نہیں ہوں..!!”

اے کریم و رحیم اللّه!
ہم خود جانتے ہیں کہ جو عبادات ہم نے کی ہیں وہ تیرے شایان شان نہیں ہیں، ہمارے روزے، ہماری نمازیں، کسی قابل نہیں ہیں، ہمارے لیے بس اتنا کافی ہے کہ ان عبادات کے ذریعہ سے کہہ سکیں کہ..
“یا اللّه! ھم باغی نہیں ہیں..!!”
ہ
میں معاف کردے، ہمارے روزے، ہماری نمازیں اپنے حبیب صلی اللہ علیہ وسلم کے طفیل قبول فرما..!!

آمین یا رب العالمین

 

(From: Social Media)

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s